سپریم کورٹ نے ایف آئی اے کو ادکارہ کے بچے واپس لانے کی ڈیڈ لائن دیدی

فوٹو: فائل

اسلام آباد( ویب ڈیسک) سپریم کورٹ نے ایف آئی اے کو ادکارہ کے بچے واپس لانے کی ڈیڈ لائن دیدی،عدالت نے ایف آئی اے کی ٹیم کو تین ہفتوں میں بچیاں وطن واپس لانے کا حکم دیا ہے۔

سپریم کورٹ میں اداکارہ صوفیہ مرزا کی بچیوں کی حوالگی کے حوالے سے کیس کی سماعت کے دوران عدالت نے کہا کہ وزیر اعظم کے پرنسپل سیکریٹری ایف آئی اے ٹیم دبئی بھیجنے کی سمری منظور کرائیں۔

اس موقع پرجسٹس مقبول باقر نے کہا کہ ایف آئی اے کی ٹیم کیساتھ وزارت داخلہ کے حکام کو بھی جانا ہوگا، اتنا عرصہ گزر گیا لیکن بچیاں واپس کیوں نہیں لائی جا سکیں۔

اسی کیس میں وزارت خارجہ کے حکام کا موقف بھی سامنے آیا ہے اور ان کا کہنا ہے کہ حکومت بچیوں کو واپس نہیں لا سکتی، درخواست گزار کو خود دبئی جاکر کیس دائر کرنا ہوگا۔

اداکارہ صوفیہ مرزا نے کہا ہے کہ کئی ایسے کیسز ہیں جن میں حکومت بیرون ملک سے بندوں کو لائی ہے، میں گزشتہ12 سال سے مشکلات کا سامنا کررہی ہوں ۔

ڈی جی ایف آئی اے نے عدالت کو بتایا کہ ٹیم دبئی بھجوانے کیلئے سمری وزیر اعظم کو بھیجی ہوئی ہے،جسٹس مقبول باقر نے کہا کہ وزیر اعظم سے سمری جلد منظور کروا کر ٹیم دبئی بھیجی جائے،۔

عدالت نے کارروائی کیلئے ایف آئی اے کو تین ہفتوں کا وقت دیا جس کے بعدجسٹس مقبول باقر کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے سماعت تین ہفتوں کیلئے ملتوی کردی گئی۔

0Shares

Comments are closed.