کوئٹہ میں رات گئے دھماکہ، 4 افراد جاں بحق 16 زخمی ہوگئے

فوٹو : سوشل میڈیا

کوئٹہ (زمینی حقائق ڈاٹ کام) بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ میں رات گئے دھماکہ، 4 افراد جاں بحق 16 زخمی ہوگئے یہ دھماکہ کوئٹہ کی جناح روڈ پر ہوا ہے.

سائنس کالج کے قریب ہونے والا دھماکہ اتنا شدید تھا کہ اس کی آواز کئی کلومیٹر دور تک سنی گئی۔ دھماکے کی وجہ سے اطراف کی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے.

دھماکے کے بعد بھگدڑ کے دوران ہی پولیس اور ریسکیو ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں اور پولیس نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔ زخمیوں کو سول ہسپتال منتقل کیا.

کوئٹہ کے ڈی آئی جی پولیس سید فدا حسن شاہ نے اس حوالے سے تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ جمعیت علمائے اسلام (جے یو آئی) نظریاتی کا پروگرام ختم ہونے کے بعد سائنس کالج کے گیٹ پردھماکاہوا۔

ڈی آئی جی کے مطابق ڈھائی کلو دھماکا خیز موادکھمبے کے ساتھ نصب کیا گیا تھا تاہم پروگرام کےدوران پولیس کی مکمل سکیورٹی فراہم کی گئی تھی واقعے کی تحقیقات کی جارہی ہیں۔

پولیس کی طرف سے یہ خدشہ بھی ظاہر کیا گیا ہے کہ دھماکہ ایک گاڑی کے قریب ہوا ہےزخمیوں کو سول ہسپتال منتقل کیا گیا ہے جہاں بعض زخمیوں کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے۔

وزیر اعلیٰ بلوچستان عبدالقدوس بزنجو نے دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے انسپکٹر جنرل آف پولیس بلوچستان سے دھماکے کے حوالے سے رپورٹ طلب کرلی ہے۔

صوبائی وزیر داخلہ ضیاء اللہ لانگو کے مطابق دھماکہ ریموٹ کنٹرول سے کیا گیا یہ پاکستان اور بلوچستان کو غیر مستحکم کرنے کی سازشوں کی کڑی ہے ہم دہشت گردوں کے خاتمے تک چین سے نہیں بیٹھیں گے۔

انھوں نے کہا امن کے دشمن اپنے مذموم مقاصد میں کامیاب نہیں ہوسکتے، دہشت اور وحشت پھیلانے والے باہمت قوم کےحصلے پست نہیں کرسکتے، سال نو پر سکیورٹی کے فول پروف انتظامات کیے گئے ہیں۔

0Shares

Comments are closed.