کوئٹہ میں 2دھماکے،2پولیس اہلکار شہید، 20سے زائد افراد زخمی


کوئٹہ (زمینی حقائق ڈاٹ کام) بلوچستان کا دارلحکومت میں یکے بعد دیگرے دو دھماکوں سے2پولیس اہلکار شہید اور20سے زائد افراد زخمی ہوگئے۔
کوئٹہ میں پہلا دھماکہ یونٹی روڈ پر اور دوسرا سریاب روڈ پر ہوا، پہلے دھماکے میں 2 اہلکار جاں بحق ہوئے جبکہ 12 اہلکاروں سمیت 18 افراد زخمی ہو گئے، جاں بحق اور زخمیوں کو ہسپتال منتقل کردیاگیا۔

دھماکے کی آواز دور تک سنی گئی، دھماکے میں پولیس وین کو نشانہ بنایا گیا،دھماکا خیز مواد موٹرسائیکل میں نصب تھا،دہشتگردی کے واقعہ میں 4 کلو دھماکا خیز مواد استعمال کیا گیا،دھماکے سے قریبی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے۔

پولیس کے مطابق اطلاع ملتے ہی سکیورٹی فورسز جائے وقوعہ پر پہنچ گئیں اور علاقے کو گھیرے میں لے کر سرچ آپریشن شروع کردیا، ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی نے کہاکہ دہشتگردبلوچستان کا امن خراب کرکے خوف و ہراس پھیلانا چاہتے ہیں۔

کوئٹہ میں دوسرا دھماکہ سریاب روڈ پر ہوا ہے، جس کے نتیجے میں متعدد افراد کے زخمی ہو ئے ،پولیس حکام کے مطابق دوسرے دھماکے کی شدت پہلے دھماکے سے کم تھی، تاہم دھماکے کے نتیجے میں کچھ افراد زخمی ہوئے جانی نقصان نہیں ہوا۔

واضح رہے کہ چند دن قبل کوئٹہ کے زرغون روڈ پر یونیٹی چوک کے قریب زور دار دھماکا ہوا تھا، جس کے نتیجے میں 2پولیس اہلکار شہید متعدد افراد زخمی ہو گئے تھے۔ زخمیوں کو طبی امداد کے لیے اسپتال منتقل کر دیا گیا تھا۔

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید نے دھماکے میں پولیس اہلکاروں کی قیمتی جانوں کے ضیاع پر افسوس کااظہارکرتے ہوئے لواحقین سے ہمدردی اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی۔

وزیر داخلہ نے کہاکہ امن و امان کیلئے بلوچستان حکومت کو مکمل معاونت فراہم کریں گے، دہشتگردی کے واقعات سے نمٹنے کیلئے کسی بھی حد تک جائیں گے،دہشتگردی کی بزدلانہ کارروائیاں فورسز کے حوصلے پست نہیں کر سکتیں ۔

0Shares

Comments are closed.