سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کا دورہ پاکستان ملتوی کردیاگیا

50 / 100

فوٹو: فائل

اسلام آباد: سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کا دورہ پاکستان ملتوی کردیاگیا،شیڈول کے مطابق سعودی ولی عہد کا نومبر کے تیسرے ہفتے میں پاکستان کے دورے پر آنا تھا۔

سعودی سفارتخانے کی طرف سےدورہ ملتوی کرنے کی تصدیق کی گئی ، حالانکہ رواں ہفتے کے آخر میں سعودی عرب کی خصوصی سکیورٹی ٹیم نے بھی پاکستان پہنچنا تھا۔

حکومت کی طرف سے پہلے دعویٰ کیاگیا تھا کہ سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کے دورے میں پاکستان کو 4.2 ارب ڈالرز کے اضافی بیل آوٹ پیکج ملنے کی توقع ہے۔

محمد بن سلمان کے دورہ پاکستان میں سعودی عرب کی جانب سے پاکستان میں مضبوط سرمایہ کاری بھی متوقع تھی،یہ بھی بتایا گیا تھا کہ سعودی عرب کی جانب سے پٹرولیم کے شعبہ میں آئل ریفائنری کے قیام پر معاہدہ بھی متوقع تھا۔

بتایا گیا تھا کہ سعودی عرب گوادر میں جدید آئل ریفائنری کے قیام میں مدد کرے گا، گوادر میں 10 ارب ڈالرز کی لاگت سے جدید آئل ریفائنری کے قیام کی سعودی عرب چین کے ساتھ مل کر مدد کرے گا۔

سفارتی ذرائع کے مطابق موجودہ غیر یقینی سیاسی صورتحال میں کسی قسم کی مزید خرابی سعودی ولی عہد کے دورے میں رکاوٹ پیدا کر سکتی ہے۔

واضح رہے اس سے قبل جب شہبازشریف اقتدارمیں آنے کے بعد سعودی عرب کے دورے پر گئے تھے تب بھی حکومت کے حامی میڈیا اور حکومت کی طرف سے 7 ارب ڈالر ملنے کے دعوے کئے گئے تھے جو بعد میں غلط ثابت ہوئے۔

یہ دوسرا موقع ہے کہ سعودی امداد ملنے کے حوالے سےپھر دعویٰ کیاگیا تاہم ایک بار پھر سعودی ولی عہد کا دورہ پاکستان ملتوی ہوگیا ہے۔

Comments are closed.