بجلی کی بد ترین لوڈ شیڈنگ پر وزیراعظم کو ندامت،حکام پر اظہار برہمی

اسلام آباد( ویب ڈیسک ) بجلی کی بد ترین لوڈ شیڈنگ پر وزیراعظم کو ندامت،حکام پر اظہار برہمی ،پیش کردہ تمام وضاحتیں شہباز شریف نے مسترد کردیں۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم شہباز شریف کی ِ صدارت ہنگامی اجلاس میں وزیراعظم نے ملک میں جاری بدترین لوڈشیڈنگ پر برہمی کااظہار کیا اور کہا کہ سارے کام میں نے ہی کرنے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہا اجلاس میں وزارت توانائی کے وزراء اور اعلی حکام کو بھی فوری طلب کیا گیااس دوران لوڈ شیڈنگ کی جو وجوعات پیش کی گئیں انھیں مسترد کرتے ہوئے وزیراعظم نے صورتحال بہتر بنانے کی ہدایت کی۔

وزیراعظم کی زیرصدارت اجلاس میں ملک میں لوڈشیڈنگ کی صورتحال پر غور کیا گیا اور لوڈشیڈنگ کی وجوہات، محرکات اور اس کے سدباب کے لئے اقدامات کا جائزہ لیا گیا۔

وزیراعظم شہبازشریف متعلقہ وزرا اور افسران پر برس پڑے اور کہا کہ کچھ بھی کریں دو گھنٹے سے زیادہ لوڈ شیڈنگ کے علاوہ کچھ برداشت نہیں۔ وزیراعظم نے وزرا اور حکام کی وضاحتیں مسترد کردیں اور کہا کہ عوام کو مشکل سے نکالیں۔

انھوں نے کہا کہ کوئی وضاحت نہیں چاہیئے، مجھے وضاحتیں نہیں عوام کو لوڈشیڈنگ کی تکلیف سے نجات چاہیے، عوام تکلیف میں ہوں اس پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔

واضح رہے کہ اقتدار میں آنے کے فوری بعد شہباز شریف کا کہنا تھا کہ ہمارے پاس کارخانے موجود ہیں مگر انھیں استعمال میں لا کر بجلی کی کمی پوری نہیں کی گئی اور بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت موجود ہے سابق حکومت انتظامی نااہلی کی وجہ سے کارخانے مکمل آپریشنل نہیں ہیں۔

0Shares

Comments are closed.