سرکاری ملازمین اور فوجی افسران اپنی فیملیز کو مارچ میں بھیجیں، عمران خان

فوٹو: اسکرین گریب

اٹک(زمینی حقائق ڈاٹ کام ) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے جب ہمیں سازش کا علم ہوا تو سازش روکنے والوں کو آگاہ کیا تھا کہ بڑی مشکل سے ملکی معیشت کو سنبھالا ہے۔

اٹک میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے سابق وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ جیل جانے اور جان کی قربانی دینے کو تیار ہوں لیکن امریکی غلامی قبول نہیں ہے، ہمارے ملک میں فیصلہ کن صورتحال ہے، آئندہ دنوں میں بہت بڑا فیصلہ ہونے جارہا ہے۔

http://

سابق وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ بدقسمتی سے کچھ نہیں کیا گیا اب چاہے جیل جاؤں یا جان چلی جائے لیکن امریکی غلامی قبول نہیں کروں گا،ان کا کہنا تھا کہ اس فیصلے سے عوام میں شعور بیدار ہوا یہی بڑی بات ہے۔

عمران خان نے کہا کہ آصف علی زرداری کا نیب میں اصلاحات کا کہنا قیامت کی نشانی ہے، میں نے فیصلہ کیا ہے کہ یہ سیاست نہیں بلکہ جہاد ہے، یہ وقت ہماری حقیقی آزادی کی جنگ ہے۔

انھوں نے کہا جب تک زندہ ہوں، چوروں، ڈاکوؤں اور غلاموں کو قبول نہیں کروں گا، آصف علی زرداری، نواز شریف اور شہباز شریف کرپٹ سیاستدان ہیں، ان میں ایک کرپٹ وہ شخص بھی جو 30 برس سے اسلام بیچ رہا ہے۔

http://

عمران خان نے کہا کون سا اتنا بڑا مسئلہ تھا جو سب نے مل کر حکومت گرائی؟ سخت مشکلات کے باوجود ہماری حکومت نے ملک کو معاشی طور پر کھڑا کیا، تعمیراتی شعبے کو اہمیت دی اور ریکارڈ ایکسپورٹ کی، آمدنی سب سے زیادہ بڑھائی۔

انھونے کہا کہ 20 تاریخ کے بعد مارچ کی کال دوں گا، سرکاری اداروں کے ملازمین اور فوجی افسران اپنی فیملیز کو مارچ میں بھیجیں،عمران خان نے کہا کسی کو بھی کسی قسم کا خوف نہیں ہونا چاہیے، ہم ان کرپٹ سیاستدانوں کے خلاف بھرپور احتجاج کریں گے۔

0Shares

Comments are closed.