وزیراعظم کا وفد مسجد نبوی پہنچنے پر پاکستانیوں کی نعرہ بازی، متعدد گرفتار

فوٹو: اسکرین گریب

الریاض( زمینی حقائق ڈاٹ کام)وزیراعظم شہباز شریف کا وفد مسجد نبوی پہنچنے پر پاکستانیوں کی نعرہ بازی، متعدد گرفتار،وفدشامل مریم اورنگزیب اور شازین بگٹی کیخلاف بھی مدینہ میں نعرہ بازی،مسجد نبوی کے احاطے میں سعودیہ میں مقیم پاکستانیوں نے چور چور کے نعرے لگائے ، مسجد کی بے حرمتی پر مظاہرین کی مذمت کا سلسلہ جاری ہے۔

سوشل میڈ پا وائرل ہونے والی ویڈیز میں دیکھا جاسکتا ہے وفاقی وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب اور شاہ زین بگٹی کے ساتھ ساتھ لوگ چل رہے ہیں نعرہ بازی بھی کرتے ہیں اور ویڈیوز بھی بنائی جارہی ہیں۔

http://

پاکستانیوں کے احتجاج کے دوران مریم اورنگزیب کے گرد سکیورٹی اہلکارچل رہے تھے جو انھیں تحفظ فراہم کرتے رہے تاہم کسی نے نعرہ بازی کرنے والوں کو روکا نہیں، اس دوران ایک شخص نے شازین بگٹی کے بال بھی کھینچ لئے۔

ممتاز عالم دین مولانا طارق جمیل نے بھی مسجد نبوی کے احاطے میں نعرہ بازی کے واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ مقدس مقام کی پامالی کی گئی جس کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔

http://

اس واقعہ کے بعد سوشل میڈیا پر ویڈیوز آ جانے کے باعث نعرہ بازی کے حق میں اور مخالفت میں دلائل کا سلسلہ جاری ہے حکومت کے حامی مذمت کررہے ہیں جب کہ مخالفین احتجاج کا دفاع کررہے ہیں۔

ٹوئٹر پر ٹرینڈ بھی چل رہے ہیں جن میں پی ٹی آئی کے حامی لوگ بھی مسجد کے تقدس کو پامال کرنے کی مذمت کررہے ہیں جن میں عمران خان کے قریبی ساتھی شہباز گل بھی شامل ہیں۔

http://

ٹوئٹر پر مریم نواز کی طرف سے ایک سابق ٹویٹ اور ویڈیو کلپ بھی شیئر کیا جارہاہے جس میں عمران خان کے بطور وزیراعظم خانہ کعبہ میں کسی شخص نے فقرہ کسا اور مریم نواز نے کہا یہ تو مکافات عمل ہے ۔

واقعہ کے بعد مدینہ میں گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب نے مسجد نبوی میں نعرے بازے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ یہ معاشرے کی تباہی ہے اسے بہتر ہونے میں وقت لگے گا۔

مریم اورنگزیب نے اپنی گفتگو کے دوران کہا میں اس سرزمین پر سیاسی گفتگو نہیں کرنا چاہتی تاہم انھوں نے بغیر نام لئے عمران خان پر تنقید کی اور کہا میں اس شخص کا نام نہیں لینا چاہتی ، اس شخص نے معاشرے میں تباہی کی۔

http://

وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ خان نے بھی نعرے بازی کی مذمت کی اور کہا کہ آج روضہ رسول کے تقدس کو پامال کیا گیا ہے محبت، امن اور سلامتی کی جگہ کو سیاست کے لیے استعمال کیا گیا۔

انھوں نے کہا کہ روضہ رسولﷺ پر آج مٹھی بھر افراد کے فعل نے پورے عالم اسلام میں پاکستانیوں کا نام بدنام کیا ہے، اس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔

بعد میں سعودی پولیس نے مسجد نبوی کے احاطے میں نعرہ بازی کرنے والے کچھ پاکستانیوں کو حراست میں لے لیاہے اور ان کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی۔

0Shares

Comments are closed.