وفاقی حکومت کا عارف علوی و عمران خان کو سزائے موت دلوانے کا فیصلہ

اسلام آباد(زمینی حقائق ڈاٹ کام) وفاقی حکومت کا عارف علوی و عمران خان کو سزائے موت دلوانے کا فیصلہ، حکومت نے صدر عارف علوی اور سابق وزیراعظم عمران خان کے خلاف آرٹیکل 6 کی کارروائی کیلئے ریفرنس دائر کرے گی۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق وفاقی حکومت نے دستور پاکستان پر عمل درآمد سے متعلق بڑا فیصلہ کیا ہے اور مبینہ آئین شکنی کے جرم میں سابق حکومت کی اہم شخصیات کے خلاف آرٹیکل 6 کے تحت ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

آرٹیکل 6 کے تحت صدر مملکت عارف علوی، سابق وزیراعظم عمران خان، ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری، گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ
کے خلاف قانونی عمل آگے برھانے کیلئے
وزرات قانون وانصاف اور وزرات داخلہ نے ریفرنس کی تیاری شروع کردی۔

میڈیا رپورٹس میں ذرائع کے حوالے سے خبریں چل رہی ہیں کہ قومی اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد کے عمل میں واضح مبینہ آئین شکنی کی گئی جبکہ صدر عارف علوی اور سابق ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری نے عمران خان کے ایماء پر مبینہ آئین شکنی کی.

ان چاروں کے بارے میں رائے قائم کی گئی ہے کہ انھوں نے دستور کوسبوتاژ کیا ہے پنجاب اسمبلی میں آئینی عمل کو سبوتاژ کیا گیا اور گورنر نے مبینہ آئین شکنی کی۔

یہ بھی کہ سپریم کورٹ اور ہائی کورٹ کے آئین پر عمل درآمد کرنے واضح احکامات کی توہین کا جرم کیا، حکومت نے مبینہ آئین شکنی سے متعلق بیانات اور اسمبلیوں کے ریکارڈ کےحصول پرکام شروع کردیا.

اس حوالے سے عدالتی احکامات اور عدالتی نظائر بھی طلب کرلیے گئے ہیں جنہیں شواہد کے طور پر ریفرنس کے ساتھ منسلک کیا جائے گا.

واضح رہے کہ پاکستان میں آئین کے آرٹیکل 6 کا مطلب ہے آئین شکنی اور آئین شکنی کی سزا موت ہے، اس سے قبل سابق صدر پرویز مشرف کے خلاف بھی کارروائی کی کوشش کی گئی جو ناکام رہی.

0Shares

Comments are closed.