سعودی عرب بھی عمران خان کی طرح بکروں سمیت مویشیوں کی افزائش پہ آگیا

فوٹو: فائل

الریاض( ویب ڈیسک)سعودی عرب بھی عمران خان کی طرح بکروں سمیت مویشیوں کی افزائش پہ آگیا،سعودی حکومت نے مویشیوں کی افزائش اور زرعی پیداوار کے فروغ کے 4بڑے منصوبوں کااعلان کردیاہے۔

اس حوالے سے سعودی عرب کی وزارت ماحولیات و پانی وزراعت نے رقم مختص کردی، جگہ کا تعین بھی کر لیاگیاہے اور منصوبوں کی تکمیل کیلئے مقررہ وقت میں عمل درآمد ہر صورت ممکن بنایا جائے گا۔

اس حوالے سے سعودی وزارت ماحولیات و پانی و زراعت کی طرف سے کہا گیا ہے کہ مویشیوں کی افزائش اور زرعی پیداوار سے متعلق یہ منصوبے شروع کرنے کا مقصد خود کفالت کی طرف پیش قدمی ہے۔

سعودی عرب کی ذرائع ابلاغ کے مطابق سعودی عرب وژن 2030 کے تحت خوراک میں خودکفیل ہونے کے لیے مکہ مکرمہ، القصیم اور جازان میں مویشیوں کی افزائش اور زرعی پیداوار کے 4 بڑے منصوبوں کا اعلان کیا ہے۔

وزارت ماحولیات، پانی و زراعت نے بتایا کہ زرعی منصوبوں کے حوالے سے القصیم کے البکیریہ علاقے میں 47 کروڑ 76 لاکھ 98 ہزار 5 مربع میٹرمیں گرین ہاؤس پروجیکٹ قائم ہوگا۔

سعودی وزارت کی طرف سے یہ بھی بتایا گیا ہے کہ مویشیوں کی افزائش کا پراجیکٹ جازان میں ابو عریش سے 21 کلو میٹر دور 3 لاکھ 28 ہزار 466 مربع میٹر پر قائم کیا جائے گا ۔

اس کے علاوہ بکروں کی افزائش کا ایک اور منصوبہ جازان کی صبیا کمشنری میں شمال مشرق میں 4 لاکھ 42 ہزار 672 مربع میٹر پر قابل عمل بنایا جائے گا، طائف میں گھوڑوں کا ایک ہسپتال 14200 مربع میٹر کے پلاٹ پر قائم کیا جائے گا۔

وزارت کی جانب سے ہدایت کی گئی ہے کہ سرمایہ کاروں سے کہا ہے کہ چاروں پروجیکٹس کے لیے ٹینڈر جمع کرائیں اور مقررہ تاریخ کی پابندی کریں۔

وزارت ماحولیات و پانی و زراعت چاہتی ہے کہ سعودی عرب وژن 2030 کے ان منصوبوں کے ذریعے مملکت تحت کھانے پینے کی اشیا میں خودکفیل ہوجائے اور گوشت کی اندرون ملک پیداوار میں اضافہ کیا جائے تاکہ اپنی ضروریات کیلئے درآمدنہ کرنی پڑے۔

0Shares

Comments are closed.