اسرائیلی پولیس کی مسجد اقصیٰ کے احاطےمیں فائرنگ، تشدد ،152 فلسطینی زخمی

غزہ( ویب ڈیسک)اسرائیلی پولیس کی مسجد اقصیٰ کے احاطےمیں فائرنگ، تشدد ،152 فلسطینی زخمی ہوگئے ہیں جنھیں مختلف اسپتالوں میں پہنچایاگیا۔

نشریاتی ادارے الجزیرہ کی رپورٹ کے مطابق مسجد الاقصیٰ کو چلانے والے اسلامی اوقاف نے بتایا کہ اسرائیلی پولیس جمعہ کو طلوع فجر سے پہلے ہی مسجد میں میں داخل ہوگئی جہاں ہزاروں نمازی صبح کی نماز کے لیے مسجد میں موجود تھے۔

طبی عملے نے بتایا کہ رمضان المبارک کے آغاز کے بعد مقبوضہ بیت المقدس کے علاقے میں یہ پہلی جھڑپ ہے،اسرائیلی پولیس کے مطابق جمعہ کو طلوع فجر سے پہلے درجنوں نقاب پوش افراد نے مسجد الاقصیٰ کی جانب مارچ کیا۔

فلسطین میں موجود ہلال احمر نے بتایا کہ اب تک جاری جھڑپوں کے دوران 20 زخمیوں کو مقبوضہ بیت المقدس کے ہسپتالوں میں لے جایا گیا ہے جبکہ اس مقام پر مزید زخمی افراد بھی موجود ہیں، اسرائیلی پولیس کا کہنا ہے کہ 3 اہلکار زخمی ہوئے ہیں۔

عینی شاہدین نے بتایا کہ اسرائیلی سیکیورٹی فورسز نے کچھ فلسطینی مظاہرین کی جانب ربڑ کی گولیاں چلائیں جنہوں نے فورسز پر پتھراؤ کیا۔

یہ جھڑپیں ایسے وقت میں ہوئی ہیں جب یہودیوں، عیسائیوں اور مسلمانوں کے اہم ایام ایک ساتھ منائے جارہے ہیں، یہودیوں کا تہوار عید فسح، عیسائیوں کا تہوار ایسٹر اور مسلمانوں کے لیے مقدس مہینہ رمضان المبارک جاری ہے۔

جاری ہے

0Shares

Comments are closed.