آسٹریلیا معیاری کرکٹ کھیلنے کیلئے پاکستان کا دورہ کرے،گریگ چیپل

فوٹو : فائل

سڈنی (ویب ڈیسک) سابق آسٹریلوی کپتان نے کہا ہے آسٹریلیا معیاری کرکٹ کھیلنے کیلئے پاکستان کا دورہ کرے،گریگ چیپل نے کہا کہ پاکستان سے کرکٹ کھیلنے کا آسٹریلیا کو فائدہ ہو گا.

ایک آسٹریلوی اخبار کیلئے کالم میں گریگ چیپل نے آئندہ سال آسٹریلین ٹیم کے دورہ پاکستان کی حمایت کرتے ہوئے کہا اٴْمید ہے اگلے سال فل اسٹرینتھ ٹیم پاکستان کا دورہ کرے گی کیوں کہ ٹیسٹ کرکٹ کی صحت بہتر کرنے کیلئے یہ دورہ بہت ضروری ہے۔

گریگ چیپل نے یہ انکشاف بھی کیا کہ ان کی اطلاعات کے مطابق آسٹریلیا کا جائزہ وفد پاکستان میں اقدامات سے مطمئن ہے۔انھوں نے کہا کہ یہ دورہ ضروری ہے تاکہ ٹیسٹ کرکٹ کو بچایا جاسکے.

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان جیسا مہمان نواز ملک کوئی اور نہیں ہے یہ میرا ذاتی تجربہ ہے کہ پاکستان میں مہمان ٹیموں کو سربراہ مملکت کے برابر سکیورٹی ملتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان اپنے دور کے عظیم آل ر اؤنڈر تھے، اب ان کے وزیر اعظم ہونے سے کرکٹ کی دنیا کا اعتماد بڑھے گا سابق کپتان نے کہا کہ شین واٹسن پی ایس ایل کھیل چکے ہیں اور انہیں اندازہ ہے کہ پاکستان میں کیسے حالات ہیں۔

گریگ چیپل کا کہنا تھا کہ پاکستان میں کرکٹ کا بہترین ٹیلنٹ ہے، بابر اعظم، رضوان اور شاہین بہترین کرکٹرز ہیں۔بگ 3 کا مقابلہ کرنے کیلئے آج دنیا کرکٹ کو ایک مضبوط پاکستان کرکٹ کی بہت ضرورت ہے۔

انھوں نے لکھا کہ کرکٹ آسٹریلیا اور پلیئرز ایسوسی ایشن ٹیم کو بتائے کہ یہ دورہ کرکٹ کیلئے کیوں اہم ہے، انہوں نے انڈین ٹیم کے کوچ کے طور پر پاکستان کا دورہ کرنے کو یاد کرتے ہوئے ذکر کیا کہ بطور انڈین ٹیم کوچ پاکستان کا دورہ کیا تھا.

گریگ چیپل نے کہا کہ مجھے اندازہ ہے کہ ان دونوں ملکوں کی کرکٹ کتنی اہم ہے، چیپل نے یہ بھی کہا کہ مجھے یقین ہے کہ ویرات کوہلی اپنی ریٹائرمنٹ سے قبل ایک بار پاکستان کا دورہ ضرور کرنا چاہیں گے۔

واضح رہے کہ شیڈول کے مطابق آسٹریلین ٹیم آئندہ سال مارچ ،اپریل میں پاکستان کا دورہ کرے گی۔پی سی بی کے مطابق دورے میں دونوں ٹیموں کے درمیان تین ٹیسٹ، تین ون ڈے اور ایک ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل میچ کھیلا جائے گا.

0Shares

Comments are closed.