افغانستان پر مسلط کردہ امریکی جنگ جنونی عمل تھا، عمران خان

فوٹو: فائل

اسلام آباد(ویب ڈیسک) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ نائن الیون میں کوئی افغان شہری ملوث نہیں تھا لیکن افغانستان پرامریکا کی مسلط کردہ جنگ ایک جنونی عمل تھا۔

غیرملکی ٹی وی کوانٹرویو دیتے ہوئے عمران خان نے کہاامریکا نے افغانستان میں نام نہادجنگ کے نام پر20 سال تک قبضہ کیے رکھا.

انھوں نے کہا کہ سمجھ نہیں آیا امریکی افغانستان میں کیا اہداف حاصل کرنا چاہتے تھے؟ ان کا کہنا تھا کہ میں تو ہمیشہ سے طاقت کے استعمال کے خلاف رہا ہوں.

وزیراعظم عمران خان نے پاکستان کی معاشی صورتحال پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کی بدحالی کےذمہ داربھٹو اور شریف خاندان ہیں پاکستان میں وسائل کی کوئی کمی نہیں.

عمران خان نے کہا بھٹو اورشریف خاندان نے وسائل کا ناجائز استعمال کیا، ہم ملک کو خوشحال بنانا چاہتے ہیں، ہمارا مقابلہ دو ایسے خاندانوں سے ہے جودولت سےمالا مال ہیں۔

وزیرِ اعظم خان نے کہا کہ بھٹو اورشریف خاندان سیاست نہیں خاندانی نظام قائم کرناچاہتے ہیں جبکہ پاکستان کی بدحالی کے ذمہ دار بھی یہی دونوں خاندان ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ کوئی بھی معاشرہ قانون کی حکمرانی کے بغیرقائم نہیں رہ سکتا اور جس ملک میں کرپشن ہو وہ کرپشن ملک کو تباہ کردیتی ہے.

وزیراعظم نے کہا کہ میں پاکستان کا سب سے زیادہ فنڈ جمع کرنے والا شخص ہوں جبکہ میرےوالد نے پاکستان کی اپنی نوعیت کی پہلی انجینئرنگ کنسلٹنسی فرم قائم کی جیت سےزیادہ ہارہمیں غلطیوں سے سیکھنا سکھاتی ہے۔

0Shares

Comments are closed.