ایف سولہ گرانے کا دعویٰ بھارتی عوام سے دھوکہ ہے، پاکستان

اسلام آباد(زمینی حقائق ڈاٹ کام) ایف سولہ گرانے کا دعویٰ بھارتی عوام سے دھوکہ ہے، پاکستان نے بھارتی دعویٰ کو ایک بار پھر مسترد کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ بھارت نے فروری سنہ 2019 میں پاکستان کا کوئی ایف 16 طیارہ نہیں مار گرایا تھا۔

ترجمان نے کہا بھارتی پائلٹ کی گرفتاری سے پہلے ایف 16طیارہ گرانے کا بھارتی دعویٰ جھوٹا ہے، ابھینندن کو ایوارڈ دینے کا مقصد بھارتی عوام کی اصل حقائق سے توجہ ہٹانا ہے۔

ترجمان دفتر خارجہ عاصم افتخار نے واضح کیا کہ ایف سولہ طیارہ گرانے کا بھارتی دعوی بے بنیاد اور من گھڑت ہے، بھارتی پائلٹ کو ایوارڈ دینا اپنی عوام کو خوش کرنا اور خفت مٹانا ہے۔

عاصم افتخار کے مطابق پاک فضائیہ نے 27 فروری 2019 کو 2 بھارتی طیاروں کو دن میں مار گرایا تھا، ایک بھارتی مگ21 طیارہ آزاد جموں و کشمیر کی حدود میں تباہ کیا گیا۔

ترجمان نے کہا کہ تباہ شدہ بھارتی طیارے کے پائلٹ کو پاکستان نے پکڑا، پھر جذبہ خیرسگالی کے تحت رہا کیا، پائلٹ کو واپس بھیجنا دلیل ہے کہ بھارتی ہٹ دھرمی کے باوجود پاکستان امن کا خواہاں ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ عالمی ماہرین، امریکی حکام نے تصدیق کی کہ اس دن پاکستان کا کوئی ایف 16 طیارہ نہیں گرا، بین الاقوامی اور امریکی ماہرین نے ایف 16 طیاروں کے اسٹاک کا بغور جائزہ لیا۔

ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ بھارتی پائلٹ کو اعزاز سے نوازنا فوجی اصولوں اور اقدار کے منافی ہے،شکست خوردہ بھارتی پائلٹ کو اعزاز سے نوازنا اپنا مذاق اڑانے کے مترادف ہے۔

0Shares

Comments are closed.