پاکستان میں جنسی جرائم بڑھنا ہمارے لئے شرم کی بات ہے، وزیراعظم

اسلام آباد( زمینی حقائق ڈاٹ کام)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے ہمارے لئے شرم کی بات ہے کہ پاکستان میں جنسی جرائم بڑھ رہے ہیں،ہمیں معاشرے کیلئے فکری انقلاب چایئے۔

اسلام آباد میں اکادمی ادبیات تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے مزید کہا کہ موبائل فون بند نہیں کرسکتے لیکن بچوں کو رول ماڈل دے سکتے ہیں، بد قسمتی سے پاکستان میں سب سے زیادہ جنسی جرائم بڑھ رہے ہیں۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ موبائل فون کے چیلنج سے معاشرے میں بہت بڑی تبدیلی آرہی ہے، بچوں کے ساتھ زیادتیاں بڑھیں انھوں نے کہا کہ زینب کیس سامنے آیا، عورتوں سے زیادتیوں کے کیسز ہیں لیکن ان پر اب بات نہیں کی جاتی۔

وزیراعظم نے کہا کہ اسکالرز کا کام تجزیہ کرنا ہوتا ہے، قوم کی رہنمائی کریں، مدینہ کی ریاست میں تعلیم پر زور دیا گیا، یہودیوں کا دنیا پر تعلیم کی وجہ سے غلبہ ہے، جو انسان حضوراکرم ﷺ کی سنت پر چلے گا اوپر جائیگا۔

انھوں نے کہاکہ ایک چیلنج یہ بھی ہے کہ ہم کرپشن کو قبول کرلیں، لوگ مجھ سے کہتے ہیں اپوزیشن لیڈر سے ہاتھ نہیں ملاتے، اپوزیشن لیڈر پر اربوں روپے کی کرپشن کے الزامات ہیں، اپوزیشن لیڈر سے ہاتھ ملانے کا مطلب ہے کرپشن کو قبول کرنا۔

انہوں نے کہا کہ دو طرح کے چیلنجز درپیش ہیں ، ان کا کہنا تھاکہ برطانیہ میں تصور بھی نہیں کیا جاسکتا کہ اربوں روپے کی کرپشن کا الزام ہو اور اسمبلی میں دو دو گھنٹے تقریریں کریں، جو قوم اچھے اور برے کی تمیز ختم کرتی ہے وہ مرجاتی ہے۔

http://

عمران خان نے واضح کیا کہ سب کہتے ہیں آپ دو بڑے خاندانوں کے پیچھے پڑے رہتے ہیں، دو خاندانوں سے ذاتی لڑائی نہیں، میری ان سے دوستی ہوا کرتی تھی میرا موقف اصولی ہے ذاتی نہیں ہے۔

0Shares

Comments are closed.