خواجہ آصف کا شہباز شریف کی موجودگی میں پارٹی میں اختلافات کااعتراف

0 0
Read Time:1 Minute, 27 Second

اسلام آباد ( ویب ڈیسک )مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما خواجہ آصف نے اعتراف کیاہے کہ ہمارے کارکن تو متحد ہیں لیکن پارٹی قیادت میں اختلافات اور جھگڑے موجود ہیں جنھیں ختم نہ کیا گیا تو نقصان ہوگا۔

راولپنڈی میں مسلم لیگ ن زیراہتمام ہونے والے ورکرز کنوینشن سے خطاب کرتے ہوئے خواجہ آصف نے کہا کہ جھگڑے ہمارے عام کارکن کے نہیں بلکہ قیادت کے ہیں،گر قیادت نے اپنے جھگڑے ختم نہ کیے تو پھر ہم کبھی بھی کامیاب نہیں ہوسکیں گے۔

خواجہ آصف نے پارٹی میں اختلافات کا اعتراف مسلم لیگ ن کے مرکزی صدر اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کی موجودگی میں کیا۔ خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ دراڑیں ختم نہ کیں تو کامیاب نہیں ہوں گے، لڑائی ختم کرکے اتحاد قائم کرنا ہو گا۔

ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے خواجہ آصف نے کہا کہ نٹونمنٹ کے الیکشن میں 73 فیصد ووٹ موجودہ حکمر انوں کے خلاف پڑا، اور ان انتخابات میں ن لیگ کی کامیابی عوام کے لیے کی گئی خدمت کا صلہ ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن نے ہمیشہ عوام کی خدمت کی ہے، لیکن آئندہ انتخابات میں کامیابی کے لیے ہمیں اتحاد قائم کرنا ہوگا۔ گلگت بلتستان اور آزادکشمیر میں ہونے والے انتخابات شفاف نہیں تھے۔

خواجہ آصف نے کہا کہ عوام مہنگائی اور غربت سے تنگ آچکی ہے، موجودہ حکومت کابوریا بستر کسی بھی وقت گول ہوسکتا ہے، پاکستان میں انتخابات کسی بھی وقت ہوسکتے ہیں۔

واضح رہے کہ مسلم لیگ ن میں بیانیہ پر اختلافات سامنے آتے رہے ہیں، حالیہ دنوں میں پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز نے بھی پارٹی کی مرکزی نائب صدر مریم نواز کے آرمی چیف کو توسیع دینے کے بیان کی مخالفت کی تھی۔

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleepy
Sleepy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %
0Shares

Comments are closed.

Translate »