فوج نکالنی ہو تو پاکستان محفوظ، کرکٹ کھیلنی ہو تو سکیورٹی ایشو؟ شعیب اختر

0 0
Read Time:1 Minute, 25 Second

راولپنڈی (زمینی حقائق ڈاٹ کام) جب افغانستان سے غیر ملکی افواج کو نکالنی تھیں تب پاکستان بہترین ملک تھا، جب انہیں فلائٹ نہیں ملتی تو پھر پی آئی اے بہترین ائیرلائن بن جاتی ہے جب کرکٹ کھیلنی ہوتو سکیورٹی کا جواز تراش لیتے ہیں. 

یہ کھری کھری سابق اسپیڈ اسٹار شعیب اختر نے پاکستان کے دورے سے انکار کرنے والی ٹیموں کو سنائی ہیں، شعیب اختر نے انگلینڈ کی جانب سے پاکستان کا دورہ منسوخ کرنے پر شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے۔

ایک نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سابق اسپیڈ اسٹار شعیب اختر نے کہاکہ انگلش ٹیم کی دورہ منسوخی کا فیصلہ پہلے سے طے شدہ تھا، یہ انگلینڈ، آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ اور امریکا کے باہمی تعاون کے ساتھ کیا گیا فیصلہ ہے. 

انھوں نے کہا کہ یہ طے پاچکا تھاکہ پاکستان کا بیانیہ خراب کرنا ہے اور کردیا ہے، یہ سب آپس میں ملے ہوئے ہیں۔شعیب اختر کا کہنا ہے کہ میری خواہش تھی کہ کاش انگلینڈ پاکستان آجائے اور یہ بیانیہ دے سکیں کہ پاکستان محفوظ ملک ہے. 

انھوں نے کہا کہ انگلینڈ نے ہماری خواہش کے بر عکس نیوزی لینڈ کا ساتھ دیا۔شعیب اختر نے کہاکہ آپ کو فوجی نکالنے ہوتے ہیں تو پاکستان سے زیادہ کوئی اچھا ملک نہیں ہوتا اور جب فلائٹ نہ مل رہی ہو تو پی آئی اے سے زیادہ اچھی فلائٹ نہیں ملتی. 

ان کا کہنا تھا کہ جب ضرورت پڑتی ہے تو ہمارا سب اچھا ہوجاتا ہے اور جب ضرورت نہیں رہتی پھر ہمارا سب کچھ برا ہوجاتا ہے انھوں نے کہا کہ اگر میں چیئرمین پی سی بی ہوتا تو ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کا بائیکاٹ کا اعلان کر دیتا. 

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleepy
Sleepy
0 %
Angry
Angry
100 %
Surprise
Surprise
0 %

Comments are closed.

Translate »