افغان مہاجرین کی باعزت واپسی کا وقت آ گیاہے، مشیر قومی سلامتی


اسلام آباد( زمینی حقائق ڈاٹ کام)قومی سلامتی کیلئے وزیراعظم کے مشیر معید یوسف نے کہا بھارت لاہور میں بطور ریاست لاہور بم دھماکے میں ملوث ہے، لاہور بم دھماکا بھارتی دہشت گردی تھی اورماسٹر مائنڈ بھارتی شہری ہے۔

وفاقی وزیر طلاعات فواد چوہدری کے ہمراہ پریس کانفرنس میں معید یوسف کا کہنا تھا کہ پاکستان میں دہشت گردی کی وارداتوں میں بھارتی خفیہ ایجنسی را کا ہاتھ ہے۔

وزیراعظم کے مشیر قومی سلامتی نے کہا کہ ہمارے پاس تمام رابطوں کے ثبوت ہیں، حملے کے تانے بانے بھارت سے ملتے ہیں،ماسٹر مائنڈ بھارتی شہری اور اس وقت وہاں ہی موجود ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمارے ادارے سائبر سیکیورٹی پر کام کر کے بہت مضبوط ہوگئے ہیں، ٹیرر فنانس کا نیٹ ورک بھی بھارت میں کام کر رہا ہے، دوسرے ملکوں کے ذریعے فنانس کیا گیا، اس سے زیادہ ثبوت کارروائی کرنے کے لیے نہیں ہوسکتے۔

معید یوسف نے کہا کہ جس دن دھماکا ہوا ہمارے انوسٹی گیشن نیٹ ورک پر سائبر حملے کیے گئے، جوہر ٹاون دھماکا اور سائبر حملے ایک ساتھ جڑے ہوئے ہیں۔ اس طرح کی کارروائیوں سے افغان مہاجرین پر بھی انگلیاں اٹھتی ہیں۔

وزیراعظم کے مشیر قومی سلامتی نے یہ بھی کہا کہ وقت آ گیا ہے کہ افغان مہاجرین کی باعزت واپسی ہو،مہاجرین کی موجودگی میں کسی کو ڈھونڈنا ناممکن وہ چلے جائیں تو پھر سوال کرسکتے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ کوئی کسی قسم کا ابہام نہیں ہے، وزیر اعظم عمران خان نے تمام ذرائع استعمال کرتے ہوئے ان لوگوں کو سامنے لانے کا کہا ہے اور ہندوستان کے اصل چہرے کو لوگوں کے سامنے لے کر آئیں گے

معید یوسف نے کہا کہ، اب یہ نہیں چلے گا کہ وہ کہیں کہ آگے بڑھنا چاہتے ہیں اور پاکستان میں کارروائیاں کریں ہم نے صورتحال بین الاقوامی برداری کے سامنے رکھ دی ہے۔

0Shares

Comments are closed.