پٹرول ،ایل پی جی، آٹا کے بعد حکومت نے بجلی بھی مہنگی کردی

فوٹو : فائل

اسلام آباد(ویب ڈیسک )سال نو کی عوام کے لئے اذیت بھری شروعات، حکومت نے پٹرولیم مصنوعات، ایل پی جی اور آٹا کی قیمتوں میں اضافہ کے بعد عوام کو نیپرا کے ذریعے بجلی کی قیمت میں ایک روپے 56 پیسے فی یونٹ اضافہ کر دیا.

نیپرا کی جانب سے جاری نوٹی فکیشن کے مطابق اس فیصلے کا اطلاق کے الیکٹرک اور لائف لائن صارفین پر نہیں ہوگا بجلی کی قیمتوں میں اضافہ رواں سال اکتوبر کے فیول ایڈجسٹمنٹ کی مد میں کیا گیا ہے۔

اکتوبر کے فیول ایڈجسٹمنٹ کی مد میں حالیہ اضافی رقم صارفین کو آئندہ ماہ کے بلوں میں ادا کرنا ہوگی، نیپرا کی جانب سے بجلی قیمتوں میں اضافہ سے صارفین پر 14 ارب 50 کروڑ روپے کا بوجھ پڑے گا۔

یاد رہے کہ نیپرا نے گزشتہ روز کے الیکٹرک صارفین کے لیے بجلی 4 روپے 70 پیسے فی یونٹ مہنگی کر دی تھی۔ نیپرا کی جانب سے کے الیکٹرک کا 11 سہ ماہی کا ٹیرف ایڈجسٹمنٹ فیصلہ جاری کیا گیا۔

نیپرا نے کے الیکٹرک صارفین سے 106 ارب روپے وصول کرنے کی اجازت دی اورکے الیکڑک صارفین کے لیے بجلی 4 روپے 70 پیسے فی یونٹ مہنگی کرنے اور ٹیرف 12 روپے 81 سے بڑھا کر 17 روپے 69 پیسے فی یونٹ کرنے کی منظوری دی۔

نیپرا نے جولائی 2016ء سے مارچ 2019ء کے عرصہ کے لیے فیصلہ جاری کیا تھا. شہریوں کی طرف سے مہنگائی میں مسلسل اضافے پر مایوسی کا اظہار کیا جارہا ہے.

Leave A Reply

Your email address will not be published.