ایشیائی پیسیفک سمٹ،بھارتی پارلیمنٹرین کو دھکے دے کر نکال دیا گیا

فوٹو : سکرین گریب

پنوم پن(ویب ڈیسک) ایشیائی پیسیفک سمٹ میں ہندوستانی وفد کو عالمی سطح  پر ذلت اوررسوائی کا سامنا کرنا پڑا،


ڈپٹی اسپیکرقومی اسمبلی قاسم سوری کی کشمیرپر تقریر روکنےکی کوشش پر سکیورٹی سٹاف نے بھارتی نمائندہ کو باہر نکال دیا ۔

بھارتی وفد کو اس وقت بین الاقوامی سطح پرذلت اورشرمندگی کا سامنا کرنا پڑا جب کمبوڈیا میں ہونے والی ایشیائی پیسیفک سمٹ 2019 میں ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری کی تقریر جاری تھی.

قاسم سوری نےاپنی تقریر میں مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کا پردہ چاک کیا جو بھارتیوں کو ایک آنکھ نہ بھایا بھارتی پارلیمنٹرین کو آگے آتے ہی سکیورٹی سٹاف نے دبوچ لیا۔

ڈپٹی اسپیکر کی تقریر کے دوران بھارتی پارلیمنٹیرین وجے جولی آپے سے باہر ہوگئے اور  تقریب کا پروٹوکول تورٹے ہوئے تقریر کے دوران ہی بیچ میں آکر تقریر روکنے کی کوشش کی جس سے تقریب کا ماحول خراب ہوگیا۔

سیکیورٹی اسٹاف نے بھارتی پارلیمنٹیرین کو دھکے دے کر ہال سے باہر نکال دیا جب کہ اس  دوران ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم سوری نے انتہائی تحمل سے اپنی تقریر پوری کی۔

اس دوران سمٹ کے مندوبین بھارتی رکن پارلیمنٹ کی حرکت اور اسے دھکے دے کر ھال سے باہر نکالنے کے مناظر انجوائے کرتے اور بھارتی رکن کی حرکت پر طنز کرتے رہے.

0Shares

Comments are closed.