نعمان نیاز نے جو کیا ایسا تو صدر اور وزیراعظم بھی نہیں کرسکتا، علی محمد

اسلام آباد( زمینی حقائق ڈاٹ کام )وزیر مملکت برائے پارلیمانی امور علی محمد خان نے کہا ہے پی ٹی وی کسی کی ملکیت نہیں ہے جیسے ٹی وی اینکر نعمان نیاز نے جو حکم دیا ایسا صدر یا وزیراعظم بھی نہیں کرسکتا، نعمان نیاز نے شعیب کی نہیں پوری قوم کی بے عزتی کی ہے، شعیب اختر ہمارے اسٹار ہیں اور وہ بے داغ انسان ہیں۔

نجی ٹی وی جیو نیوز کے پروگرام میں علی محمد خان نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سرکاری ٹی وی پر بہت برا ہوا، ان کا کہنا تھا کہ شعیب اختر کے ساتھ پیش آنے والے واقعہ پر وزیراعظم نے بھی افسوس کا اظہار کیا ہے اور ہم اس معاملے کو منطقی انجام تک پہنچائیں گے۔

وزیر مملکت نے کہا کوئی بھی عہدے کا غلط استعمال نہیں کرسکتا، عام پاکستانی کی بھی اتنی ہی عزت ہے جتنی کسی سیاستدان یا وزیر کی ہے،انہوں نے کہا کہ نعمان نیاز نے حد کردی، شعیب اختر نے دنیا میں پاکستان کا جھنڈا اونچا کیا۔

علی محمد خان نے یاددلایا کہ اگر دنیا میں کسی نے ایک گیند سے ہندوستانیوں کو چپ کرایا تو وہ شعیب اختر تھا، قومی ہیروز کے ساتھ ایسے نہیں ہوتا، نعمان نیاز کو سوچناچاہیے تھا، شعیب اختر نے اپنے مزاج کے خلاف بہت صبر سے کام لیا۔

ان کا کہنا تھا کہ اس معاملے پر وزیراعظم بھی افسردہ ہوئے، کابینہ میں بھی اس پر بات ہوئی ہے کہ نعمان نیاز کو ہٹایا جائے، اس معاملے کی تحقیقات ہوں گی۔

علی محمد خان نے انکوائری کمیٹی کے اعلامیہ میں شعیب اختر کو آف ائیر کرنے سے متعلق کہا کہ یہ بہت معیوب کام ہوا، شعیب اختر کو کیسے بین کرسکتے ہیں، یہ تو مظلوم کو سزا دینے جیسا ہے۔

انھوں نے کہا جب شعیب نے پروگرام میں استعفیٰ دیا تو کس طرح انہیں آف ائیر کیا گیا، ہم اس معاملے کو منطقی انجام تک پہنچائیں گے، کمیٹی اس معاملے کا پورا نوٹس لے گی۔

0Shares

Comments are closed.