کنٹونمنٹ انتخابات ،ن لیگ حکمران جماعت تحریک انصاف سے آگے نکل گئی

اسلام آباد( زمینی حقائق ڈاٹ کام)حکمران جماعت پی ٹی آئی کو مہنگائی اور غیرمقبول فیصلوں نے کنٹونمنٹ بورڈز انتخابات، مسلم لیگ ن
سے پیچھے دھکیل دیا اور ن لیگ مجموعی طور پر سب سے زیادہ ووٹ حاصل کرنے میں کامیاب رہی ۔

فافن کی طرف سے جاری اعدادو شمار پر مبنی رپورٹ کے مطابق تحریک انصاف نشستوں کے لحاظ سے آگے رہی لیکن پاکستان مسلم لیگ ن ووٹوں کے لحاظ سے سب سے آگے چلی گئی۔

انتخابی نتائج کے مطابق پاکستان مسلم لیگ ن 27 فیصد سے زائد ووٹوں کے ساتھ 59 نشستیں جیتنے میں کامیاب ہوئی۔ جبکہ حکمراں جماعت تحریک انصاف 26 فیصد سے زائد ووٹوں کیساتھ 63 نشستیں جیتنے میں کامیاب ہوئی۔

رپورٹ کے مطابق آزاد امیدواروں نے کل 20 فیصد سے زائد ووٹ حاصل کیے، جبکہ پاکستان پیپلز پارٹی بمشکل 6 فیصد سے کچھ زائد ووٹ حاصل کر سکی۔

کنٹونمنٹ بورڈز انتخابات ووٹوں کے حصول کے لحاظ سے کالعدم تحریک لبیک چوتھی بڑی سیاسی جماعت ثابت ہوئی، تاہم اسے ایک بھی نشست پر فتح حاصل نہ ہوئی۔

دوسری جانب 12 ستمبر کو ہوئے انتخابات کے بعد اب تک کل 212 وارڈز کے نتائج سامنے آ چکے، جن میں تحریک انصاف بمشکل پہلی پوزیشن حاصل کر سکی 63 وارڈز پر فتح حاصل کی، مسلم لیگ ن کو 59 نشستوں پر فتح حاصل ہوئی۔

کنٹونمنٹ بورڈ انتخابات کے دوران آزاد امیدوار بھی بڑی تعداد میں فتح حاصل کرنے میں کامیاب رہے، اب تک کل 52 آزاد امیدواروں کو کامیابی حاصل ہو چکی، جبکہ سندھ کی حکمراں جماعت پیپلز پارٹی صرف 17 نشستیں جیت سکی۔

کنٹونمنٹ بورڈز انتخابات میں متحدہ قومی موومنٹ کے 10، جماعت اسلامی کے 7، بلوچستان عوامی پارٹی اور عوامی نیشنل پارٹی کے 2، 2 امیدوار کامیاب قرار پائے۔

کنٹونمنٹ بورڈ انتخابات کے نتائج میں پہلے نمبر پر آنے کے باوجود تحریک انصاف کیلئے نتائج تشویش ناک قرار دیے جا رہے ہیں۔ خاص کر پنجاب میں تحریک انصاف اپوزیشن جماعت مسلم لیگ ن کا زور توڑنے میں ناکام رہی۔

سیاسی تجزیہ کاروں کی آراء کے مطابق ملک میں مہنگائی کے طوفان اور پنجاب میں مسلم لیگ ن کی قیادت کی پالیسیوں کی وجہ سے پنجاب میں مسلم لیگ ن51، آزاد امیدوار32، پی ٹی آئی 28 ، جماعت اسلامی 2 وارڈز میں کامیاب رہی جبکہ پیپلز پارٹی کوئی نشست نہ جیت سکی۔

0Shares

Comments are closed.