سائنو ویک ویکسین کی 15 لاکھ خوراکیں پاکستان پہنچ گئیں

اسلام آباد(زمینی حقائق ڈاٹ کام) کورونا وائرس کی ویکسین بڑی تعداد میں چین سے پاکستان پہنچ گئی ہے جس کے بعد ویکسین کی قلت ختم ہو گئی ہے۔

اس حوالے سے کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کی ویکسین سائنو ویک کی 15 لاکھ خوراکیں پاکستان پہنچ چکی ہیں۔

این سی او سی اعلامیہ کے مطابق سائنو ویک ویکسین کی یہ 15 لاکھ خوراکیں پی آئی اے کی خصوصی پرواز سے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد پہنچی ہیں۔

یہ بھی بتایا گیا ہے کہ سائنو ویک ویکسین چین سے خریدی گئی ہے، چین نے پاکستان میں ویکسین کی بلاتعطل فراہمی یقینی بنانے کیلئے خصوصی اقدامات کر رکھے ہیں۔

کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کی جانب سے یہ بھی بتایا گیا ہے کہ آئندہ ہفتے 20 سے 30 لاکھ ویکسین کی مزید خوراکیں پاکستان پہنچ جائیں گی۔

ذرائع کے مطابق پاکستان نے فائزر ویکسین کی مزید ایک کروڑ 30 لاکھ خوراکیں حاصل کرنےکا معاہدہ کر لیا ہے اورفائزر ویکسین کی پہلی کھیپ جولائی کے آخر تک پاکستان پہنچ جائے گی۔

اس کے علاوہ روسی ویکسین اسپوٹنک کی بھی ایک کروڑ خوراکیں پاکستان پہنچیں گی، جن میں سے 10لاکھ خوراکوں پر مشتمل پہلی کھیپ آئندہ ماہ کے پہلے ہفتے پاکستان پہنچ آئے گی۔

ذرائع وزارت صحت کا کہنا ہے کہ پاکستان اگست کے شروع میں ایسٹرا زینیکا ویکسین کی بھی ایک کروڑ 20 لاکھ مزید خوراکیں حاصل کرے گا۔

معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان کاکہنا ہےکہ 22 اور 23جون تک چینی ویکسین کی مزید لاکھوں خوراکیں پاکستان پہنچیں گی۔

0Shares

Comments are closed.