پاک فوج کا نوجوان فلم سازوں کیلئے فلم فیسٹیول کااعلان

0
0 0
Read Time:2 Minute, 41 Second

فوٹو :این اے ایس ایف ایف

راولپنڈی(زمینی حقائق ڈاٹ کام)آئی ایس پی آرنے ملک کے نوجوان فلم سازوں اور طلبہ کے لیے فلم فیسٹیول اور ایوارڈز کا اعلان کردیا ہے،نوجوان فلم سازوں کے لیے نیشنل امیچوئر شارٹ فلم فیسٹیول (این اے ایس ایف ایف) (نساف) کا اعلان کیا گیاہے۔

نیشنل امیچوئر شارٹ فلم فیسٹیول میں نوجوان فلم ساز پاکستان کے رنگ، وادی سندھ کی تہذیب، پاکستانی ثقافت، چھوٹی صنعتوں کا کاروبار میں کردار، پاکستان میں فلاحی کام اور زراعت کا ملکی ترقی میں کردار جیسے موضوعات پر بنی فلمیں جمع کروا سکیں گے۔

آئی ایس پی آر کی جانب سے نوجوان فلم سازوں کے لیے مقابلے اور ایوارڈز کے مذکورہ منصوبے میں اداکارہ ماہرہ خان، ہمایوں سعید، اقرا عزیز اور گلوکار فرحان سعید سمیت دیگر شوبز شخصیات بھی جیوی کا حصہ ہیں۔

ماہرہ خان سمیت دیگر اداکاروں نے آئی ایس پی آر کے فلم منصوبے کا حصہ بننے پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے سوشل میڈیا پر نوجوان فلم سازوں کو آگے آکر اپنی صلاحیتیں دنیا کو دکھانے کی دعوت دی۔

اس فلم فیسٹیول کے ذریعے نوجوان فلم ساز 6 مختلف کیٹیگریز میں اپنی دستاویزی و فیچر فلمیں ایوارڈز کے لیے جمع کروا سکیں گے جن میںاینیمیٹڈ اور فکشن سمیت دستاویزی فلمیں بھی جمع کروا ئی جا سکتی ہیں۔

فیسٹیول میں تمام کیٹیگریز میں دو طرح کی فلمیں جمع کروائی جا سکتی ہیں، جس میں سے موبائل فون پر ریکارڈ کی گئی یا بنائی گئی فلمیں بھی ہیں جب کہ دوسری وہ فلمیں جو عام فلمی انداز میں کیمروں اور دیگر ٹیکنالوجی سے بنائی گئی ہوں۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے مطابق فلم فیسٹیول میں مذکورہ تمام کیٹیگریز میں سے ایک فلم کو بہترین فلم کا ایوارڈ دیا جائے گا جب کہ دیگر تین ایوارڈز بھی فلم سازوں کو دیے جائیں گے۔

فیسٹیول میں شرکت کرنے والے فلم سازوں کو بہترین فلم کے علاوہ جیوری اپریسیئشن ایورڈز اور اسکل سیٹ ایوارڈز بھی دیے جائیں گے جب کہ ایوارڈز جیتنے والے فلم سازوں کو اعلیٰ فلمی تعلیم کے لیے اسکالر شپس بھی فراہم کی جائیں گی۔

فیسٹیول میں شرکت کے خواہش مند فلم ساز اپنی 10 سے 12 منٹ دورانیے کی مختصر فلمیں مقابلے کے لیے جمع کروا سکتے ہیں،فلم سازوں کو یکم جنوری 2021 تک اپنی رجسٹریشن کروانی ہوگی جب کہ انہیں 10 مارچ 2021 تک اپنی فلمیں جمع کروانی ہوں گی۔

فیسٹیول میں شرکت کے خواہش مند نوجوان فلم ساز (نساف) کی ویب سائٹ کے ذریعے آن لائن رجسٹریشن کرواسکتے ہیں،فلم سازوں کو یہ سہولت بھی دی گئی ہے کہ اگر انہوں نے پہلے سے ہی کوئی دستاویزی یا مختصر فیچر فلم بنا رکھی ہے تو وہ بھی ایوارڈز کے لیے بھجوا سکتے ہیں۔

پرانے بنائے گئے پراجیکٹ کے بارے میں واضح کیا گیاہے کہ اس ضمن میں بتایا گیا ہے کہ جنبوری 2018 سے قبل کی کسی دستاویزی یا فیچر فلم کو قبول نہیں کیا جائے گا۔

اداکارہ ماہرہ خان، اقرا ء عزیز، فرحان سعید سمیت دیگر اداکاروں نے آئی ایس پی آر کے اس اقدام کی تعریف کرتے ہوئے کہا ہے کہ نوجوانوں کو اپنی صلاحیتوں کے اظہار کااچھاموقع ملے گا۔

اس مقصد کیلئے نامور اداکاروں کو برینڈ ایمبیسیڈر بنایا گیاہے جب کہ یہی موصول ہونے والے دستاویزی اور فیچرز فلم کیلئے جیوری کا بھی حصہ ہوں گے۔

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleppy
Sleppy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %
Shares

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Translate »
en_USEnglish