سابق گورنر گلگت بلتستان کے بیٹے کا 4 روزہ ریمانڈ

0
0 0
Read Time:1 Minute, 7 Second

اسلام آباد(ویب ڈیسک)سابق گورنر گلگت بلتستان میرغضنفر کے بیٹے پرنس سلیم کو نیب نے فراڈ کے الزام میں گرفتار کر کے عدالت پیش کر دیا۔

ملزم پرنس سلیم کواسلام آباد کی احتساب عدالت میں پیش کیا گیا تھا جس نے ملزم کا چار روزہ راہداری ریمانڈ دیدیا ہے۔

پرنس سلیم کو نیشنل بینک سے پچاس ملین روپے فراڈ کے کیس میں گرفتار کیا گیاہے پرنس سلیم کو احتساب عدالت سے راہداری ریمانڈ لے کر نیب راولپنڈی کے ریجنل بیورو گلگت منتقل کیا جائے گا۔

پرنس سلیم پر سلک روٹ نامی پرائیویٹ کمپنی کے وائس چیئرمین کی حیثیت میں کرپشن کا الزام ہے۔ پرنس سلیم نے جعلی دستاویزات پر نیشنل بینک سوست برانچ سے پچاس ملین کا قرض لیا۔

پرنس سلیم کئی بار طلب کئے جانے کے باوجود وہ نیب کے سامنے پیش نہیں ہوئے تھےنیب ٹٰیم نے پرنس سلیم کو احتساب عدالت پیش کرتے ہوئے ملزم کے سات روزہ راہداری ریماںڈ کی استدعا کی تھی۔

عدالت نے چار روزہ راہداری ریمانڈ دیتے ہوئے انھیں متعلقہ عدالت میں پیش کرنے کی ہدایت کر دی، ملزم کی جانب سے وکیل اسامہ خالد ایڈوکیٹ عدالت کے سامنے پیش ہوئے.

ملزم کے وکیل نے کہا کہ ان کے موکل کو دس سال پرانے کیس میں نیب نے گرفتار کیا ہے عزت دار شخص کو بلاوجہ گرفتار کرکے عزت اچھالی جا رہی ہے۔

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleppy
Sleppy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %
Shares

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Translate »
en_USEnglish