داتا دربارحملہ ،خودکش بمبار افغانی نکلا، سہولت کار گرفتار

1403
0 0
Read Time:1 Minute, 19 Second

فوٹو اے ایف پی

لاہور(ویب ڈیسک) داتا دربار خود کش حملے کے ایک سہولت کار کو پنجاب پولیس کے محکمہ انسداد دہشتگردی (سی ٹی ڈی) نے گرفتار کر لیا جب کہ خودکش حملہ آور کی شناخت بھی کر لی ہے۔

اس حوالے سےسی ٹی ڈی ذرائع کے مطابق مبینہ سہولت کار محسن خان کو بھاٹی گیٹ کے علاقے سے گرفتار کیا گیا اور وہ چارسدہ کے علاقے شبقدر کا رہائشی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ خودکش حملہ آور کی شناخت صادق اللہ مہمند کے نام سے ہوئی ہے جو کہ مو قع پر ہی ہلاک ہو گیا تھا۔

سی ٹی ڈی ذرائع نے بتایا کہ خود کش حملہ آور افغانستان کا رہائشی تھا اور افغان پاسپورٹ پر 6 مئی کو طورخم بارڈر سے پاکستان میں داخل ہوا۔

خودکش حملہ آور صادق اللہ کو طیب اللہ نامی شخص نے طورخم بارڈر سے لے کر لاہور پہنچایا جہاں دونوں نے 7 مئی کو سہولت کار محسن اور نور زیب کے گھر پر قیام کیا۔

یاد رہے کہ رواں ماہ 8 مئی کو داتا دربار کے باہر خودکش حملے میں میں 5 پولیس اہلکاروں سمیت 12 افراد شہید اور 25 زخمی ہوئے تھے۔

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleppy
Sleppy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %
Shares

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *