شاہد آفریدی نے وزیراعظم کے نئے ڈومیسٹک اسٹرکچر کی حمایت کردی

0
0 0
Read Time:1 Minute, 32 Second

سپورٹس ڈیسک

کراچی: پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد خان آفریدی نے وزیراعظم کے موقف کی حمایت کرتے ہوئے نئے ڈومیسٹک اسٹرکچر کو اچھا قراردیتے ہوئے کہا کہ وقت کے ساتھ یہ بہتر ہی ہوگا۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے جارح مزاج آل راونڈر شاہد آفریدی کا کہنا تھاکہ کسی بھی سسٹم کی افادیت کے سامنے آنے میں دو سے تین سال کا عرصہ لگتا ہے، ٹیم کی کارکردگی میں تبدیلی لانے کے لیے ذہنیت تبدیل کرنا ہوگی۔

انھوں نے کہا کہ جارحانہ کرکٹ میں ہی ہماری کامیابی ہے، ڈیپارٹمنٹ سے زائدالعمر کرکٹر ہی فارغ ہوئے ہیں، موجودہ ڈومیسٹک سسٹم میں 290 کھلاڑیوں کو سینٹرل کنٹریکٹ دیا گیا ہے۔

شاہد خان آفریدی نے واضح کیا کہ انٹرنیشنل کرکٹ دلیروں کا کھیل ہے، ہمارے کھلاڑیوں کو بہتر نتائج کے لیے دلیر بننا ہوگا، کرکٹ میں جارحانہ انداز ہی کامیابی دلواتا ہے۔

شاہد آفریدی نے پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے عہدے کی پیشکش سے متعلق خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ نہ مجھے کسی نے کوئی پیشکش کی ہے اور نہ میرے پاس وقت ہے۔

قومی ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی نے کہا کہ پی سی بی کے موجودہ سیٹ اپ میں کسی بھی عہدے کے لیے ان سے رابطہ نہیں کیا اور وہ ایسی کسی چیز کے بارے میں نہیں جانتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ’میں اپنی فاؤنڈیشن کے کام میں بہت مصروف ہوں اور مجھے آپ ہی کے ذریعے ایسی قیاس آرائیوں کے بارے میں علم ہوا، پی سی بی نے مجھ سے موجودہ سیٹ اپ میں کسی بھی عہدے کے لیے رابطہ نہیں کیا۔

یاد رہے شاہد آفریدی سے قبل سابق فاسٹ باؤلر شعیب اختر نے خود میڈیا پر یہ دعویٰ کیا تھا کہ انھیں مصباح الحق کی جگہ چیف سلیکٹر بنانے کیلئے بورڈ آفیشل نے ان سے رابطہ کیا ہے تاہم بورڈ کی طرف سے کوئی تصدیق نہیں ہوسکی تھی۔

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleppy
Sleppy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %
Shares

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Translate »
en_USEnglish