طورخم اور چمن بارڈر 4 دن کیلئے کھولنے کا فیصلہ

24
0 0
Read Time:1 Minute, 15 Second

فوٹو : فائل

اسلام آباد(زمینی حقائق ڈاٹ کام)کورونا وائرس خطرات کے باوجود پاکستان نے افغان حکومت کی درخواست پر طورخم اور چمن بارڈر 4 دن کیلئے کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔

پاکستان نے افغانستان میں کورونا وائرس کے کیسز رپورٹ ہونے کے بعد چمن بارڈر بند کیا تھا تاہم بعد ازاں ملک میں کورونا وائرس کا پھیلاؤ روکنے کے لیے قومی سلامتی کمیٹی نے 16 مارچ سے ایران اور افغانستان کے ساتھ سرحد کو مکمل طور پر بند کردیا تھا۔

افغان حکومت کی درخواست پر طورخم اور چمن بارڈر عارضی طور پر 6 سے 9 اپریل تک کھولے جائیں گے ۔

یہ فیصلہ پاکستان میں موجود افغان شہریوں کی وطن واپسی کے لیے کیا گیا ہے،ترجمان کے مطابق افغان حکومت کی خصوصی درخواست اور انسانی ہمدردی کی بنیاد پر بارڈر کھولنے کا فیصلہ کیا۔

ترجمان کا کہنا ہے کہ ایک ہمسایہ کی حیثیت سے اور برادرانہ دوطرفہ تعلقات کے پیش نظر پاکستان افغانستان کے عوام کے ساتھ یکجہتی کرتا ہے۔

یاد رہے کہ قومی سلامتی کمیٹی کے فیصلے کے بعد 20 مارچ کو وزیراعظم عمران خان نے چمن بارڈر کھولنے کی ہدایت کی تھی اور کہا تھا کہ کورونا جیسی عالمی وبا پھوٹنے کے باوجود ہم اپنے افغان بھائی بہنوں کی مدد کے لیے پوری طرح یکسو اور پرعزم ہیں۔

پاکستان میں کورونا وائرس کیسز کی تعداد مسلسل میں اضافہ ہورہا ہے اور اب تک ملک بھر میں 40 افراد مہلک وائرس کا شکار بن گئے ہیں جبکہ متاثرہ مریضوں کی تعداد 2700 سے زیادہ ہوچکی ہے۔

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleppy
Sleppy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %
Shares

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Translate »