سعودی عرب میں اقامہ یا شناختی کارڈ رہن رکھنے پر5 ہزار ریال جرمانہ

0
0 0
Read Time:1 Minute, 21 Second

فوٹو : سوشل میڈیا

ریاض : سعودی حکومت کی طرف سے واضح کیا گیا ہے کہ کسی کا بھی قومی شناختی کارڈ یا اقامہ رہن رکھنا منع ہے، کوئی بھی سعودی یا مقیم غیرملکی کسی بھی ادارے یا فرد کے یہاں رہن کے طور پر شناختی کارڈ یا اقامہ رکھنے کا مجاز نہیں، ایسا کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

اس حوالے سے سعودی ذرائع ابلاغ کے مطابق وزارت داخلہ کے ماتحت محکمہ احوال مدنیہ کی جانب سے تنبیہ کی گئی ہے کہ وہ کسی بھی حالت میں اپنا قومی شناختی کارڈ رہن کے طور پر نہ رکھیں جو ایسا کرے گا اس سے باز پرس ہوگی۔

محکمہ احوال مدنیہ نے گزشتہ روز آگہی مہم کے تحت جاری پیغام میں کہا ہے کہ قومی شناختی کارڈ اور اقامہ سرکاری دستاویز ہے اسے کسی بھی ادارے کے یہاں رہن رکھنا منع ہے۔

واضح رہے کہ سعودی قانون کے بموجب شناختی کارڈ رہن رکھنے پر 5 ہزار ریال تک جرمانہ ہوسکتا ہے، محکمہ پاسپورٹ بار بار تنبیہ کرتا رہتا ہے کہ کوئی بھی غیرملکی اقامہ کارڈ جسے ھویہ مقیم کہا جاتا ہے کسی کے یہاں بھی رہن کے طور پر نہیں رکھا جاسکتا۔

اخبار 24 کے مطابق وزارت داخلہ کے ماتحت محکمہ احوال مدنیہ کی جانب سے تنبیہ کی گئی ہے کہ وہ کسی بھی حالت میں اپنا قومی شناختی کارڈ رہن کے طور پر نہ رکھیں- جو ایسا کرے گا اس سے باز پرس ہوگی-

محکمہ احوال مدنیہ کے آگہی مہم کے تحت جاری پیغام میں کہا ہے کہ قومی شناختی کارڈ اور ’اقامہ‘ سرکاری دستاویز ہے اسے کسی بھی ادارے کے یہاں رہن رکھنا منع ہے-

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleppy
Sleppy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %
Shares

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Translate »
en_USEnglish