بھارتی جیل میں ایک اور پاکستانی قیدی قتل

894
0 0
Read Time:1 Minute, 18 Second

اسلام آباد( ویب ڈیسک) بھارتی جیل میں قید ایک اور پاکستانی کو قتل کر دیا گیا۔

ماہی گیر نورالامین کو سمندری حدود کی خلاف ورزی پر بھارت نے گرفتار کیا تھا لیکن2017 میں سزا پوری ہونے کے باوجود پاکستانی ماہی گیر کو رہا نہیں کیا گیا۔

نورالامین 4 بچوں کے والد اور گھر کے واحد سربرارہ تھے۔ پاکستانی ماہی گیر نورالامین کی بیٹی کا کہنا ہے کہ 18 دن قبل یہ افسوسناک خبر آئی کہ والد قید کے دوران انتقال کر گئے ہیں۔

نورالامین کے اہل خانہ نے حکومت سے میت کی حوالگی کی کوششیں تیز کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔پاکستان فشر فورک فورم کے مطابق بھارتی جیلوں میں 150پاکستانی ماہی گیر قید ہیں۔

تین ماہی گیر 20 سال سے قید ہیں جبکہ ایک ماہی گیر امیر حمزہ کینسر کا مریض ہے۔ماہی گیر تنظیمیں کہتی ہیں کہ نورالامین کو ممکنہ طور پر بھارتی جیل میں تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔

نورالامین اس سے قبل بھی 2010 میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں گرفتار ہو چکے ہیں، اس وقت 6 ماہ کی قید کے بعد انہیں جذبہ خیر سگالی کے تحت رہا کر دیا کیا گیا تھا۔

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleepy
Sleepy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %
0Shares

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Translate »